’’اب کوئی مائی کا لال پاکستان کرکٹ ٹیم کو شکست دے کر دکھائے۔۔۔۔‘‘ مخالف ٹیم کو دھول چٹا دینے والا پاکستان کو ایک اور شعیب اختر مل گیا

پورٹ آف سپین (قدرت روزنامہ) پاکستان کے نوجوان فاسٹ باﺅلر محمد حسنین نے کیریبین پریمیر لیگ (سی پی ایل) کے اپنے پہلے ہی میچ میں دھوم مچا دی اور عمدہ کارکردگی کے ذریعے اپنی ٹیم کو فتح سے ہمکنار کروایا۔تفصیلات کے مطابق19سالہ محمد حسنین سی پی ایل میں ٹرنباگو نائٹ رائیڈرز کی نمائندگی کر رہے ہیں جس کا مقابلہ سینٹ کٹس اینڈ نیویس پیٹریاٹس سے ہوا جس میں عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے محمد حسنین نے 36رنز کے عوض 3 کھلاڑیوں کو پویلین کی راہ دکھائی جن میں ہم وطن سینئر بلے باز محمد حفیظ کی وکٹ بھی شامل ہے۔واضح رہے کہ پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) کا چوتھا ایڈیشن جیتنے والی فرنچائز کوئٹہ گلیڈی ایٹرز نے محمد حسنین کو دریافت کیا اور انہیں ٹیم میں جگہ دی جنہوں نے اپنی کارکردگی کی بدولت آئی سی سی ورلڈکپ 2019 ءکے لیے قومی سکواڈ میں بھی جگہ بنائی تاہم وہ میگا ایونٹ کا ایک میچ بھی نہیں کھیل سکے تھے۔محمد حسنین اب تک5ون ڈے انٹر نیشنل اور ایک ٹی ٹونٹی انٹر نیشنل میچ میں پاکستان کی نمائندگی کرچکے ہیں ۔ جبکہ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق لاہور میں پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان کے ہمراہ قومی ٹیم کے نئے ہیڈ کوچ اور چیف سلیکٹر مصباح الحق نے پریس بریفنگ دی۔اس دوران مصباح الحق نے پی سی بی سے اظہار تشکر کرتے ہوئے کہا کہ کرکٹ بورڈ نے مجھ پر اعتماد کا اظہار کیا اور مجھے 2 اہم ذمہ داریاں سونپ دی گئیں۔مصباح الحق کا کہنا تھا کہ میں جو کچھ بھی ہوں، میں نے بطور کرکٹر جو بھی حاصل کیا وہ پاکستان کے نام کے بغیر ممکن نہیں تھا،

جو بھی کرکٹ کھیلی اور عزت ملی اگر اس سے پاکستان کا نام ہٹا دیں تو کچھ نہیں ہے، لہٰذا میں اس ملک کا اور لوگوں کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔ہیڈکوچ اور چیف سیلکٹر کی ذمہ داریوں پر ان کا کہنا تھا کہ یہ میرے لیے فخر کی بات ہے، تاہم جب اختیار آتا ہے تو وہ آپ کا امتحان ہوتا ہے جسے ایمانداری سے پورا کرنا ہوتا ہے لیکن یہ آسان نہیں۔انہوں نے کہا کہ میری کوشش ہوگی کہ میں پوری ایمانداری اور طاقت سے اپنا کردار ادا کروں اور پاکستان کرکٹ کی بہتری، اس کی ترقی، پیشہ وارانہ صلاحیت اور نظام کے لیے کام کروں۔اس موقع پر صحافیوں کی جانب سے مختلف سوالات کیے گئے، جس کا وسیم خان اور مصباح الحق نے جواب دیا۔وسیم خان نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ جو سلیکشن کمیٹی پہلے تھی وہ ختم ہوگئی لیکن جو 6 ہیڈ کوچز تھے وہ چیف سلیکٹر کے ساتھ کام کریں گے کیونکہ وہ ڈومیسٹک کرکٹ میں تمام چیزیں دیکھتے ہیں۔

جی آئی ڈی سی آرڈیننس واپس لیا جانا بد قسمتی ہے، تاجر برادری

لاہور(قدرت روزنامہ) حکومت کا مختلف انڈسٹریز کو گیس انفرااسٹرکچر ڈیولپمنٹ سیس (جی آئی ڈی سی) کے 416 ارب روپے کے بقایاجات کو 50 فیصد رعایت کے ساتھ ادا کرنے کے صدارتی آرڈیننس جاری کرنے اور اسے ایک ہفتے میں ہی واپس لینے پر تاجر برادری نے برہمی کا اظہار کیا۔ آرڈیننس واپس لیے جانے کا مطلب ہے کہ کئی سالوں سے حکومت اور ڈیفالٹرز کے درمیان جاری قانونی جنگ آئندہ بھی جاری رہے گی۔ واضح رہے کہ پی ٹی آئی حکومت نے 27 اگست کو صدارتی آرڈیننس جاری کیا تھا جس کے تحت صنعتوں سے 420 ارب روپے کے جی آئی ڈی سی تنازع کے حوالے سے تصفیے کی پیشکش کی گئی تھی۔ آرڈیننس کے تحت صنعت، فرٹیلائزر اور سی این جی کے شعبے 50 فیصد بقایاجات کو 90 روز میں جمع کراکر مستقبل کے بلوں میں 50 فیصد تک رعایت حاصل کرسکتے ہیں جبکہ انہیں اس حوالے سے عدالتوں میں موجود کیسز بھی ختم کرنے ہوں گے۔ اس آرڈیننس کو جاری کرنے کے بعد اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے حکومت پر شدید تنقید کی جارہی تھی۔ فیصل آباد کے پاکستان ٹیکسٹائل ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن کے چیئرمین خرم مختار کا کہنا تھا کہ 'آرڈیننس کو واپس لیا جانا بدقسمتی ہے، حکومت اور صنعت دونوں نے نئے آغاز کا موقع گنوا دیا'۔ان کا کہنا تھا کہ فیصلے سے پنجاب کی صنعتوں کو فرق نہیں پڑے گا کیونکہ زیادہ تر صارفین اپنے بقایا جات کا بڑا حصہ ادا کر رہے ہیں تاہم اس سے کراچی سمیت سندھ کی صنعتیں متاثر ہوں گی کیونکہ انہوں نے اس پر حکم امتناع لے رکھا ہے اور وہ جی آئی ڈی سی کے بقایاجات ادا نہیں کر رہے ہیں'۔ اس ہی طرح کے خیالات کا اظہار جی آئی ڈی سی میں آنے والی مختلف صنعتوں سے تعلق رکھنے والی دیگر کاروباری شخصیات نے بھی کیا۔ آل پاکستان ٹیکسٹائل ملز ایسوسی کے سابق چیئرمین ایس ایم تنویر کا کہنا تھا کہ 'معاہدے کے اطلاق سے حکومت کو مستقبل میں مستقل آمدنی حاصل کرنے کا موقع ملتا اور صنعتوں کو جی آئی ڈی سی کی لاگت میں کمی کا موقع ملتا جبکہ ان کا عدالتی کارروائیوں کا خرچ بھی بچ جاتا'۔ فرٹیلائزر کمپنی کے ایگزیکٹو کا ماننا ہے کہ اس معاہدے سے صنعت کو یوریا کی قیمت کم رکھنے کے لیے مدد حاصل ہوتی۔نام ظاہر نہ کرنے کی درخواست پر انہوں نے بتایا کہ 'فرٹیلائزر انڈسٹری سے آرڈیننس کے واپس لیے جانے سے سب سے بڑا نقصان یہ ہوا ہے کہ ہمیں اب اپنی قیمتوں پر نظر ثانی کرنی ہوگی، ہم حالیہ گیس کی قیمتوں میں اضافے کو برداشت کرتے ہوئے یوریا کی قیمتوں کو موجودہ سطح پر برقرار رکھے ہوئے ہیں کیونکہ حکومت نے ہمیں جی آئی ڈی سی بقایاجات کے تصفیے اور مستقبل میں اس کی شرح میں کمی کی یقین دہانی کرائی تھی'۔ آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن کے نمائندے غیاث پراچہ نے وزیر اعظم کے فیصلہ پر شدید برہم نظر آئے۔ ان کا کہنا تھا کہ 'میری نظر میں حکومت اور کاروباری برادری کو تکنیکی تنازع کو مذاکرات کے ذریعے حل کرنے کی کوشش کرنی چاہیے نہ کہ ہر معاملے کو عدالت لے کر جائیں، جی آئی ڈی سی آرڈیننس نے بقایاجات کے مسئلے کو ہمیشہ کے لیے حل کرنے کا موقع فراہم کیا تھا، میں دونوں حکومتوں اور کاروباری افراد سے گزارش کروں گا کہ ایک جگہ بیٹھ کر عدالت کے باہر اس معاملے کو حل کریں'۔

وقت کیا سے کیا بنا دیتا ہے۔۔۔ انتقال کے بعد ’ عابد علی‘ کے ساتھ کیا سلوک ہوگیا؟ لیجنڈری اداکار کی بیٹی ’ رحمہ ‘ نے روتے ہوئے ایسا پیغام جاری کر دیا کہ پورا پاکستان افسردہ ہوگیا

کراچی(قدرت روزنامہ) گزشتہ روز اداکار عابد علی کراچی کے ایک ہسپتال میں انتقال کر گئے تھے ۔ عابد علی کئی سالو ں سے دل کے عارضے میں مبتلا تھے اور گزشتہ دو ماہ سےہسپتال میں زیر علاج تھے ۔ اداکار عابدعلی کے انتقال پر شوبز انڈسٹری میں سوگ پایا گیا ۔ پاکستان ٹیلی ویژن کے کلاسیک عہد میں وارث جیسے ڈرامے سے شہرت حاصل کرنے والے معروف اداکار عابد کی عمر 67 سال تھی۔ مرحوم اداکار عابد علی کی بیٹی رحمہ علی باپ کی موت پر انتہائی دکھی دکھائی دیں ۔ انھوں نے ہسپتال سے ہی ایک ویڈیو پیغام جاری کیا جس میں انھوں نے اپنی سوتیلی ماں پر بدسلوکی کا الزام لگایا اور باپ کی لاش کو اپنے ساتھ لے جانے کی شدید مذمت کی ۔ انھوں نے ہسپتال سے جاری کیے گئے ایک ویڈیو پیغام میں کہا کہ ” میں آپ سب کو ایک حقیقت بتانا چاہتی ہوں ، پاپا کی دوسری بیوی رابعہ نورین ، انکی باڈی (لاش ) لیکرہسپتال سے چلی گئی ہیں ۔یہاں ہسپتال میں ، میں ، میری ماں ، میری پھوپھی اور پھوپھا موجود ہیں اور ہمیں کسی نے بھی باپ کی لاش نہیں دی ہے ۔ اب ہم یہ بھی نہیں جانتے کہ کہاں جائیں ہم لوگ ۔ ہم لوگ یہ بھی نہیں جانتے کہ وہ باپ کی لاش لیکر کہاں گئی ہیں”۔ اداکار عابد علی کی بیٹی رحمہ علی نے مزید کہا کہ” مجھے میری پھو پھو نے پیغام دیا ہے کہ ہم تمام عورتیں جن میں ، میں ، میر ی ماں اور میری پھوپھو شامل ہیں ، ہم رابعہ نورین کے گھر نہیں جاسکتی کیوں کہ رابعہ نورین نے اپنے گھر آنے سے منع کیا ہے ۔ میری سوتیلی ماں نے ہمیں جنازے کے متعلق بھی نہیں بتایا ہے کہ جنازہ کب اور کہاں ہوگا ۔ اور اب ہم لوگ یہ بھی نہی جانتے کہ ہم سب لوگ جو عابد علی کے بیٹیاں اور بہنیں ہیں کیا کریں ؟ “۔ عابد علی کی بیٹی کا مزید کیا کہنا تھا؟ ویڈیو آہ بھی دیکھیں:یاد رہےکہ اداکار عابد علی نے پہلی بیوی سے علیحدگی کے بعد معروف اداکار رابعہ نورین سے شادی کر لی تھی ۔

’’ ہر چیز کو بِدعت مت بناؤ، غمِ حسینؑ میں رونا سنتِ رسولﷺہے۔۔۔ ‘‘ جب فرشتہ حضور ﷺ کو امام حسینؑ کی شہادت کی خبر دینے آیا تو آقا کریم نے اُس وقت کیاکِیا؟ مولانا طارق جمیل کا خوبصورت خطاب

لاہور(قدرت روزنامہ)معروف عالم دین مولانا طارق جمیل جہاں اسلامی حلقوں میں مفاہمت ے لیے کوشاں رہتے ہیں وہیں وہ تبلیغی کاموں اور درس و بیانات دینے بھی مصروف نظر آتے ہیں ۔ مولانا طارق جمیل محرم الحرام کی فضیلت بیان کرتے ہوۓ کہا کہ ” 10 محرم الحرام ایک داستان ہی نہیں بلکہ ایک سبق ہے یہ قربانی کی لازوال مثال ہے، لوگ شہید ہو کر عزت پاتے ہیں لیکن میرے مطابق حسین ؑ نے شہید ہو کر شہادت کو عزت بخشی ہے ۔ لوگ قربانی دے کر بڑا بنتے ہیں لیکن حسینؑ نے خود قربان ہوکر قربانی کوبڑا بنادیا ۔لوگ اللہ کی راہ میں لٹ کر ، پٹ کر کامیابی کے زینے حاصل کرتے ہیں لیکن میرے حسینؑ نے اللہ کی راہ میں لٹ کر ، پٹ کر ، مٹ کر کامیابی کو عزت کا مفہوم پہنا دیا اور عزت کا لباس پہنا دیا ۔ میرے تو پیارے نبی ؐ نے خود کہا کہ ” امام حسین ؑ اور امام حسنؑ جنت کے نوجوان سردار ہیں”۔ جنت تو پلےت ہی بہت خوبصورت ہے لیکن اللہ حسن ؑ اور حسینؑ کو سردار بناکر جنت کو اور خوب صورتی بخش دیگا ۔ اللہ تعالی فرماۓ گا ” اے جنت ! میں نے تمھیں حسنؑ اور حسینؑ کے اضافے سے اور زیادہ خوبصورت بنا دیا ۔ شہادت کو حسینؑ نے خوبصورت بنایا ، قربانی کو آل رسول ؐ نے خوبصورت بنایا۔ کامیابی کو آل رسولؐ نے ، مفہوم پہنایا ، اللہ کی راہ میں لٹ کر جینا حسین ؑ نے سکھایا۔اللہ کو پالینے کے لیے کہاں تک جایا جاسکتا ہے، کربلا ایک پیغام ہے ۔ حسین ؑ پاک کے لیے رونا بھی سنت ہے ۔ایک مرتبہ آپؐ نے ام سلمہ سے فرمایا ” ام سلمہؒ ! آج ایک فرشتہ ملنے آرہا ہے ۔ بہت خاص ہے کسی کو بھی اندر مت آنے دینا۔ راستے میں ام سلمہؒ کھڑی ہو گئیں ۔ اسی اثنا ء میں امام حسین ؑ چھوٹے بچے گھر آگئے اور ام سلمہ ٰ ؒ نے دروازے پر روک لیا اور وہ رونے لگے جب وہ رونے لگے تو ام سلمہٰ ؒ نے چھوڑ دیا ۔ تھوڑی دیر کے بعد میرے نبی ؐ کی اندر سے زور زور سے رونے کی آواز آئی اور ام سلمہٰ سے رہا نہ گیا اور بھاگتی ہوئی اندر پہنچیں ، دیکھا کہ آپﷺ نے امام حسین ؑ کو اپنے سینے سے لگایا ہوا ہے اور رو رہے ہیں ۔ ام سلمہٰؒ کے سوال پر آپﷺ نے فرمایا کہ ” سلمہٰؒ جو فرشتہ آج ابھی آیا تھا وہ بتا رہا تھا کہ آپ کی امت ، آپکے اس نواسے مبارک کو قتل کردیگی اور جہاں انکا خون گرے گا وہ مٹی بھی اس فرشتے نے مجھے دکھائی ۔ ابھی حسین ؑ کی شہادت بھی نہ ہوئی تھی کہ رویا جا رہا تھا تو ہم لوگ تو امام حسینؑ کی شہادت پر روتے ہیں اور دنیا قیامت کے واقعے پر روتی رہے گی ۔ ہر چیز کوبدعت مت بناؤ ۔ ہر سال ایسا ہی معلوم ہوتا ہے جیسےکہ ابھی اس سال ہی امام حسینؑ کی شہادت ہوئی ہے ۔ اگر ٹیپو سلطان کی بات کروں تو اس شخص کو بھی جب انگریزوں نے شہید کیا تو پورے لشکر نے توپوں کی سلامی اور عزت و احترام کیساتھ دفن کیا جبکہ میرے نبی پاک ﷺ کے نواسے کو کفن بھی نہ دیا گیا ، جنازہ بھی نہ پڑھنے دیا گیا اور دفن بھی کرنےدیا گیا ۔ اگلےدن پتہ چلا کہ بنو اسد کے بارے میں پتہ چلا عمر بن سعد کو کہ وہ انکو دفنانے والے ہیں اور رات و رات انکو مٹی میں دبا دیا اور اوپر پانی چھوڑ دیا تاکہ پتہ نہ چلے کی حسینؑ وجود مبارک کہاں ہے۔اگلے دن بنو اسد کابوڑھا آیا اور جب پانی خشک ہوگیا تو اس نے مٹی کو اٹھا اٹھا کرسونگھنا شروع کردیا اور سونگھتے سونگھتے ایک جگہ پر رک گیا اور کہا کہ یہاں میرے حسین ؑ مدفون ہیں کیوں کہ یہاں سے جنت کی خوشبو آرہی ہے ۔حسینؑ جنت کے سردار ہیں اور انکی قبر مبارک بھی جنت کی خوشبوسے لبریز ہے “۔ لعنت ہو یزد پر ، انکی ارواح پر اور انکی قبروں پر جنھوں نے آل رسول ﷺ کو اپنی تلواروں کے گھاؤ دیے ۔”مولانا طارق جمیل کا کیا کہنا تھا ؟

’’ اگر جہاز میں بیٹھاتے ہو تو حوصلہ بھی رکھا کرو۔۔۔ ‘‘ معروف ٹک ٹاک ماڈلز ’ حریم شاہ‘ اور ’ صندل خٹک ‘ نے مبشر لقمان کی کونسی ویڈیو بنا لی کہ سینئر اینکر دھمکیوں پر اتر آئے؟ ویڈیو نے سوشل میڈیا پر ہلچل مچا دی

لاہور(قدرت روزنامہ) ٹک ٹاک، پاکستان کا بچہ بچہ اس بخار کا شکار ہوگیا ہے ،سرکاری محکموں کے خواتین و حضرات اس ایپ کا بے دریغی سے استعمال کر رہے ہیں ، آئے روز مختلف قسم کی ویڈیوز دیکھنے میں ملتی ہیں، ٹک ٹاک کا شکار پاکستانی سیاستدان بھی ہو چکے ہیں ابھی کچھ روز قبل ہی معروف ٹک ٹاک ماڈلز صندل خٹک اور حریم شاہ نے صوبائی وزیر فیاض الحسن چوہان کے ساتھ کچھ ویڈیوز بنا کر سوشل میڈیا پر اپ لوڈ کر دیں تو سوشل میڈیا پر طوفان اُمڈ آیا، فیاض الحسن چوہان کو ان ویڈیو کو بعد تنقید کا نشانہ بھی بنایا گیا ، اب انہی ٹک ٹاک ماڈلز یعنی حریم شاہ اور صندل خٹک نے مبشر لقمان کے حوالے سے ایسی ویڈیو اپ لوڈ کر دی ہے کہ سوشل میڈیا پر نئی بحث چھڑ گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق ٹک ٹاک ماڈلز صندل خٹک اور حریم شاہ کی جانب سے ایک ویڈیو جاری کی گئی ہے جس میں وہ اپنے مداحوں سے کچھ کہنا چاہ رہی ہیں، اس ویڈیو پیغام میں حریم شاہ اور صندل خٹک کا کہنا تھا کہ ’’ ناظرین ہم لوگ آپ سے کچھ کہنا چاہتے ہیں، آپ لوگوں نے دیکھا ہوگا کہ ہماری کچھ ویڈیو ز وائرل ہوئیں ہیں جو کہ ہیلی کاپٹر اور جہاز میں بنائی گئی ہے، اس ویڈیو میں جو جہاز دکھایا گیا تھا وہ سینئر اینکر پرسن مبشر لقمان کا تھا، اس ویڈیو کے بعد بہت سے ایشوز آرہے ہیں، ہمیں مبشر لقمان کی جانب سے دھمکیاں مل رہی ہیں کہ وہ ہمیں پولیس کو پکڑوا دیں گے، یہ کر دیں گے وہ کر دیں گے، پہلے تو آپ نے ہمیں خود بھیجا کہ جائیں اور میرے جہاز کے پاس جا کر ویڈیو بنا لیں، اب اگر ہم نے بنا لی ہے تو دھمکیاں دی جارہی ہیں کہ میں آپ کے گھر آجاؤں گا، کسی لڑکی کو دھوکہ دینا کونسی شرافت ہے؟ یہ آپ کو شبہ ہی نہیں دیتا، اگر آپ کسی کو جہاز میں بیٹھاتے ہیں تو پھر حوصلہ بھی رکھا کریں ‘‘۔ صندل خٹک اور حریم شاہ کا مزید کیا کہنا تھا؟ ویڈیو آپ بھی دیکھیں :

رسی جل گئی مگر بَل نی گیا۔۔۔۔ مریم نواز نے اپنی سوشل میڈیا ٹیم کو اداروں کے خلاف کیا حکم جاری کر دیا ؟ جان کر حمزہ شہباز بھی غصے میں آگئے

لاہور (قدرت روزنامہ) مریم نواز کی پیشی کے موقع پر ن لیگ کے اینٹی اسٹیبلشمنٹ رہنماؤں کو وہاں بلا کر دوبارہ اہم اداروں کے خلاف ہرزہ سرائی کرنے کی ہدایت کی گئی، نعرے بازی بھی مریم نواز کے میڈیا سیل اور سابق وزیر اطلاعات کی ہدایت پر ہوتی رہی۔ با وثوق ذرائع کے مطابق مریم نواز کی ہدایت پر گزشتہ روز ان کی نیب کورٹ میں پیشی کے موقع پرپرویز رشید، نہال ہاشمی، جاوید ہاشمی، سابق چیئرمین پیمرا ابصار عالم سمیت ایسے رہنماؤں کو خاص طور پر بلوایاگیا تھا جو ماضی میں اسٹیبلشمنٹ اور اداروں کے خلاف سخت ترین زبان استعمال کرتے رہے ہیں،پیشی پر سب کچھ پلاننگ کے تحت کیا گیا تھا اور باقاعدہ سابق وزیر اطلاعات اور مریم نواز کے سوشل میڈیا کے چار ایکٹویسٹ ن لیگی کارکنوں کو اہم اداروں کے خلاف نعرے لگانے کی تلقین کرتے اور شاباش بھی دیتے رہے ، پھر ن لیگ سوشل میڈیا سیل کے لوگ اداروں کے خلاف اس نعرے بازی کو سوشل میڈیا پر شئیر بھی کرتے رہے ۔جس وقت اداروں کے خلاف نعرے بازی شروع ہوئی تو یوسف عباس نے فوری منع کرنے کی کوشش کی مگر کیپٹن صفدر اور مریم نواز نے انہیں خاموش کرا دیا۔نعرے بازی کی فوٹیج تین غیر ملکی چینلز کو بھیجنے کے حوالے سے مریم نواز نے ہدایت کی جس پرپرویز رشید نے مسکرا کر کہا اب تک پہنچ بھی گئی ہیں ۔اینٹی اسٹیبلشمنٹ اور اداروں کے خلاف سخت رویہ رکھنے والے ان رہنماؤں کو مریم نواز کی طرف سے یہ پالیسی دی گئی ہے ۔پالیسی کے مطابق اداروں پربھرپور تنقید یہ رہنما کریں اور مریم نوازفی الحال خاموش رہیں جبکہ اس مقصد کیلئے باقاعدہ انٹرنیشنل با لخصوص بھارتی میڈیا کو استعمال کیا جائے ۔ اس ضمن میں باقاعدہ ایک علیحدہ سیل بنا دیا گیا جو اداروں کے خلاف تنقید کو بھرپور سپورٹ کرنے سے لیکر دیگر معاملات میں آگے لیکر چلے گا ۔ ذرائع کا کہنا ہے احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر جب اداروں کے خلاف سخت ترین زبان استعمال کرنے کے حوالے سے حمزہ شہباز کو علم ہوا تو انہوں نے اس پر ناراضگی کا اظہار کیا اوروہ اس وقت تک اوپر نہ آئے جب تک نعرے بازی ختم نہ ہوئی۔سابق چئیرمین پیمرا کو بھی من پسند صحافیوں کی لابی تیار کرنے کا ٹاسک دیا گیا ہے ۔مریم نواز کی ذاتی ٹیم موجودہ حالات میں اہم قومی ادارے کو تنقید کا نشانہ بنا کر غیر ملکی قوتوں کو خوش کرنااورذاتی فائدہ اٹھانا چاہ رہی ہیں ۔پاکستان میں عدالتوں سے سزا یافتہ اپوزیشن رہنماؤں کی میڈیا کوریج پر غیر اعلانیہ پابندی کے بعد حزب اختلاف نے عوام تک اپنا پیغام پہنچانے کے لیے ڈیجیٹل میڈیا پر توجہ مرکوز کر لی ہے۔خاص طور پر پاکستان مسلم لیگ ن کی اہم رہنما مریم نواز نے، جن کے جلسے، ریلیاں، پریس کانفرنس اور انٹرویو دکھانے پر بھی غیر اعلانیہ پابندی ہے، اپنی آواز عوام تک منظم انداز میں پہنچانے کے لیے ڈیجیٹل میڈیا پر لائیو، ریکارڈڈ اور تحریری طور پر رسائی کو ممکن بنانے کے اقدامات میں تیزی کر دی ہے مسلم لیگ ن کے موجودہ متحرک رہنماؤں کے مطابق وہ اپنے کارکنان کی تربیت کر چکے ہیں اور ان کے ہمدرد بھی سوشل نیٹ ورکس پر اپنی موجودگی بھرپور انداز میں منوا رہے ہیں۔مریم نواز کی سوشل میڈیا ٹیم نے ان کے حالیہ جلسے اور پریس کانفرنسز فیس بک، ٹوئٹر اور یوٹیوب پر نہ صرف لائیو دکھائے بلکہ ان کی حمایت میں کئی مثبت ٹرینڈز بھی چلائے۔مسلم لیگ ن کی سوشل میڈیا ٹیم کے سربراہ عاطف رؤف نے ایک نجی ٹی وی سے بات کرتے ہوئے بتایا ملک بھر میں ساڑھے تین ہزار سے زائد نوجوان لڑکے اور لڑکیاں ن لیگ کی بنیادی سوشل میڈیا ٹیم میں رجسٹرڈ ہوچکے ہیں اور ان کی تعداد میں مزید اضافہ کیا جا رہا ہے۔ انھوں نے کہا ٹیم کے 35 ارکان موبائل کٹ اور ڈی ایس ایل آر کیمروں کے ہمراہ مریم نواز کے ساتھ ہوں گے اور جہاں بھی وہ خطاب یا میڈیا سے گفتگو کریں گی وہ پیجز اور ویب سائیٹ پر لائیو دکھائی جائے گی۔ان کے مطابق ہر ڈویژن کی ٹیم الگ پیج بنائے گی اور اپنے علاقوں کے پارٹی ایونٹ کور کرے گی۔ ’لاہور، فیصل آباد، گجرانوالہ اور ملتان کی ٹیموں نے بھرپور کام شروع کر دیا ہے جبکہ دیگر ڈویژنز میں ٹیمیں تیار کی جا رہی ہیں۔‘ عاطف رؤف نے بتایا چند روز پہلے ملک بھر کے مختلف اضلاع سے سوشل میڈیا ورکرز کو مسلم لیگ ن ماڈل ٹاؤن سیکرٹریٹ میں باقاعدہ تربیت دی گئی، جس میں 250 کارکنوں نے شرکت کی۔ تربیتی سیشن میں ماہرین نے کارکنوں کو موبائل سے ایونٹ کوریج، ٹرائی پاڈ، مائیک، موبائل اور ڈی ایس ایل آر کیمرے سے لائیو اور ریکارڈ مواد چلانے کے طریقے سکھائے۔ انھوں نے دعویٰ کیا کہ ان کے ساتھ کام کرنے والے ساتھی کارکن ہیں اور انہیں فل الحال تنخواہ نہیں دی جا رہی۔ موبائل کٹ بھی بیشتر کارکنوں نے اپنے پیسوں سے خریدی ہیں۔ تاہم پارٹی کی سطح پر نوجوان کارکنوں کی اس ٹیم کو براہ راست مریم نواز کی سرپرستی حاصل ہے۔ ’پارٹی کو جدید ٹیکنالوجی کے ذریعے عوامی سطح پر متعارف کرانے میں ضلعی عہدے دار بھی سوشل میڈیا ٹیموں سے تعاون کے پابند ہیں۔ انھوں نے تسلیم کیا کہ ان کی حریف جماعت پی ٹی آئی کے مقابلے میں ن لیگ نے تاخیر سے ڈیجیٹل میڈیا کی طرف توجہ دی۔

فیس بُک پر دوستی کا بھیانک انجام۔۔۔ تصویر میں نظر آنے والا لڑکا سعودی عرب سے اپنی لالچی محبوبہ سے ملنے کراچی پہنچا تو لڑکی نے کیا کَیا؟ جان کر آپ بھی کانپ اُٹھیں گے

کراچی(قدرت روزنامہ) آج کل فیس بک، وٹس ایپ سمیت نوجوان نسل سوشل میڈیا پر کافی متحرک دکھائی دیتی ہے، نوجوان جوڑے اپنا جیون ساتھی چننے کے لیے سوشل میڈیا ایپس کا بے دریغی سے استعمال کر رہے ہیں جس کے نقصانات آئے روز دیکھنے کو مل رہے ہیں، ایسا ہی ایک دلکراش واقعہ پیش آیا کراچی میں جہاں سعودی عرب سے لوٹنے والے نوجوان کو اسکی محبوبہ نے قتل کے بعد لاش کو جلا ڈالا، تفصیلات کے مطابق گوجرنوالہ کے رہاشی نوجوان کوکراچی میں محبوبہ نے قتل کے بعدلاش کوکچراکنڈی میں جلاڈالا ،

یہ واقعہ پیش آیا تھا عید الفطر کے روز لیکن کئی ماہ گزرنے کے بعد اس پر اسرار قتل سے بھی پردہ اُٹھ ہی گیا ، کراچی کے علاقے کریم آبادمیں کچراکنڈی سے عید الفطر کے روز ایک جلی ہوئی لاش ملی، نوجوان کی شناخت ہوئی علی حمزہ کے نام سے ، علی حمزہ کومحبونہ نے عید الفطر سے تین روز قبل سعودی عرب سے کراچی بلایا ،لالچی محبوبہ شبانہ نے عیدالفطر کی چاندرات کونیند کی گولیاں کھلاکرعلی حمزہ کے گلے میں پھندالگاکرقتل کیا،قتل کی لرزہ خیزواردات میں متحدہ لندن کاکارندہ اور فلاحی ادارے کابانی بھی ملوث نکلا۔ لاش کوٹھکانے لگانے کے لیے قاتل محبوبہ کوایمبولینس فراہم کی گئی ،لاش عید الفطر کے پہلے روزپھینکی گئی ، لاش ایک روز تک کچرے کے ڈھیرمیں ہی پڑی رہی ،قاتل محبوبہ کوچین نہ آیا تو ساتھی ملزم خلیل کے ہمراہ دوبارہ کچراکنڈی پہنچی ،عید کے دوسرے روز ملزمہ شبانہ نے پیٹرول پمپ سے پیٹرول خریدا اور لاش کوآگ لگائی ،ملزمہ شبانہ ساتھی ملزم خلیل کے ہمراہ واردات کے بعدفرار ہوئی، واعے کی اطلاع ملتے ہی قانون نافذ کرنے والے ادارے ہوئے متحرک اور شہر قائد میں چھاپوں کا ایک نہ رکنے والا سلسلہ شروع ہوا،

خفیہ اداروں کی اطلاع پر پتہ چلا کہ واقعے کے ذمہداران ڈیرہ اسماعیل خان میں موجود ہیں، قانون نافذ کرنے والے ادارے نےڈیرہ اسماعیل خان پہنچے، ڈیرہ اسماعیل خان میں چھاپے کے بعدتفتیشی پولیس اور قانون نافذکرنے والے اداروں کی جانب سے ملیرجعفرطیارسوسائٹی میں چھاپہ مارا گیا ، اس چھاپے میں قاتل محبوبہ شبانہ ساتھی ملزم خلیل کے ہمراہ گرفتار ہوگئی، ْقتل کی واردات سے قبل لالچی محبوبہ نے عاشق کے ساتھ سیلفیاں بھی بنوائیں، لاش کی شناخت مقتول کے ایک دانت کی مددسے ہوئی ،لالچی محبوبہ شبانہ کاآبائی تعلق ڈیراہ اسماعیل خان سے ہے،ملزمہ کاساتھ دینے والے متحدہ لندن کے کارندے خلیل کے فلاحی ادارے کے دفترمیں کھدائی بھی گئی، مجرمان نے اعتراف جرم کر لیا ہے تاہم ان سے تحقیقات کاسلسلہ جاری ہے۔

میاں اسلم اقبال وزیر اعلیٰ پنجاب، عُثمان بُزدار کو گورنر پنجاب بنا کر چوہدری سرور کو وفاق میں لیجانے کا امکان

لاہور(قدرت روزنامہ) سینئر صحافی عمر یعقوب کا کہنا ہے کہ عمران خان نے پنجاب میں تبدیلی لانے کا فیصلہ کر لیا ہے، عثمان بُزادر جو کہ نہایت ہی معصوم اور وسیم اکرم پلس تھے وہ بھی تبدیل ہونے جا رہے ہیں، جو ہام بات ہے وہ یہ کہ وہ مائنس نہیں ہونگے بلکہ انہیں وزیر اعلیٰ پنجاب کے منصب سے ہٹا کر گورنر پنجاب کے کے عہدے پر فائز کر دیا جائے۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر صحافی عمر یعقوب کا کہنا تھا کہ ہمارے واقفان حال کا یہ کہنا ہے کہ عمران خان نے پنجاب میں تبدیلی لانے کا فیصلہ کر لیا ہے، عثمان بُزادر جو کہ نہایت ہی معصوم اور وسیم اکرم پلس تھے وہ بھی تبدیل ہونے جا رہے ہیں، جو ہام بات ہے وہ یہ کہ وہ مائنس نہیں ہونگے بلکہ انہیں وزیر اعلیٰ پنجاب کے منصب سے ہٹا کر گورنر پنجاب کے کے عہدے پر فائز کر دیا جائے جبکہ وزیر اعلیٰ کے لیے وزیر اعظم عمران خان نے صوبائی وزراء میں سے میاں اسلم اقبال، یاسر ہمایوں صاحب اور ہاشم جواں بخت سے ملاقاتیں بھی کر لی ہیں، لیکن ہاشم جواں بخت نے وزیر اعلیٰ پنجاب بننے سے معذرت کر لی ہے، ایسے میں پنجاب کے وزیر اعلیٰ کے لیے مضبوط ترین امیدوار کے طور پر میاں اسلم اقبال کا نام سامنے آرہا ہے کیونکہ انہیں جہانگیر ترین اور چوہدری سرور اور علیم خان صاحب کی سر پرسستی حاصل ہے۔ عمر یعقوب کا کہنا تھا کہ ایسے میں یہ سوال بھی پیدا ہوتا ہے کہ چوہدری سرور کہاں جائیں گے؟ تو چوہدری سرور صاحب کی قسمت کا فیصلہ بھی ہوچکا ہے انہیں وفاق میں نہایت ہی اہم ذمہ داری سونپی جارہی ہے، چوہدری سرور کو وفاق میں شفٹ کرنے کے بعد پنجاب میں نئی ٹیم کے ساتھ کام کیا جائے گا۔ :

لاہور سمیت ملک کے بیشتر علاقوں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان

لاہور(قدرت روزنامہ)محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ 24گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم گرم و مرطوب ر ہے گا ۔ تاہم لاہور، راولپنڈی,اسلام آباد اور کشمیر میں مختلف مقامات پرگرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے،گزشتہ24گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم گرم مرطوب وخشک رہا۔بدھ کے روز لاہور شہر کا درجہ حرارت زیادہ سے زیادہ38اور کم سے کم36سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا جبکہ صبح کے وقت ہوا میں نمی کا تنا سب82 فیصد تھا۔

شادی کے گیارہویں دن ہی بیزاری۔۔۔۔۔ عماد وسیم کے حوالے سے ایسی خبر آ گئی کہ مداحوں کا دل ٹوٹ گیا

کراچی(قدرت روزنامہ) دیگر کرکٹرز کی طرح قومی کرکٹرعماد وسیم بھی ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے سے بیزار دکھائی دیتے ہیں۔ انہوں نے ٹیسٹ کرکٹ میں عدم دلچسپی کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انجریز کا شکار رہنیکے سبب ٹیسٹ کرکٹ کھیلنا مشکل ہوگا۔عماد وسیم ون ڈے اور ٹی ٹوئنٹی کرکٹ میں پاکستان کے لیے لمبے عرصے تک خدمات سر انجام دینے کے خواہاں ہیں۔ انہوں نے محمد عامرکے ٹیسٹ کرکٹ چھوڑنے کے فیصلے کو بھی درست قرار دیا۔ پاکستان میں ٹیسٹ کرکٹ کی قدر میں خاطر خواہ کمی واقع ہوئی ہے،دیگرکرکٹرز کی طرح قومی کرکٹر عماد وسیم بھی ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے میں دلچسپی نہیں رکھتے۔ایک مشہور ویب سائیٹ کو انٹرویو دیتے ہوئے عماد وسیم کا کہنا تھا کہ انہیں نہیں لگتا کہ وہ ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے کی پوزیشن میں ہیں۔انہوں نے کہا کہ انجریز کے سبب وہ لمبی کرکٹ نہیں کھیل سکتے۔ انکا کہنا تھا میں لال گیند سے کرکٹ کھیلنے کے بجائے سفید گیند کی کرکٹ کھیلنے کو ترجیح دونگا۔عماد وسیم کا مزید کہنا تھا کہ وہ وائٹ بال کرکٹ میں زیادہ بہتراور لمبے عرصے تک پاکستان کے لیے خدمات سر انجام دے سکتے ہیں۔آل راؤنڈرعماد وسیم نے محمد عامر کے ٹیسٹ کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کے فیصلے کو بھی درست قرار دیا۔انکا کہنا تھا کہ دنیا بھر میں وائٹ بال سے کرکٹ زیادہ کھیلی جارہی ہے اورٹیسٹ کرکٹ چھوڑ کر عامر زیادہ عرصے تک ون ڈے اور ٹی ئنٹی کرکٹ کھیل سکتے ہیں۔ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق ڈین جونز نے مصباح الحق اور وقار یونس کو نئی ذمہ داریاں سنبھالنے پر مبارکباد دی ہے۔پاکستان ٹیم کا ہیڈ کوچ کے امیدوار ڈین جونز نے اپنی ناکامی کے باوجود کھلے دل سے مصباح الحق اور وقار یونس کو مبارکباد پیش کی ۔ سماجی رابطوں کی ویب سائیٹ پر انہوں نے کہا کہ ہیڈ کوچ اور بولنگ کوچ کا عہدہ سنبھالنے پر اپنے دونوں ساتھیوں کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کرتا ہوں، ہم نے مل کر چمپئن شپس جیتی ہیں، امید ہے کہدونوں پاکستان کیلئے بھی ایسی ہی کارکردگی دہرائیں گے۔